عبایا پہنیں یا جینز پہنیں، ہمیں پابندی نہیں لگانی چاہیے: فواد چوہدری

وفاقی وزیر برائے سائنس اینڈ ٹیکنالوجی فواد چوہدری نے کہا ہےکہ عبایا پہنیں یا جینز پہنیں، ہمیں پابندی نہیں لگانی چاہیے.

راولپنڈی میں نجی یونیورسٹی کی انٹرنیشنل میڈیاکانفرنس سےخطاب کرتے ہوئے فواد چوہدری نے کہا کہ ججز سے ہاتھ جوڑکرکہتا ہوں ڈیجیٹل میڈیاکےکیس نہ سناکریں یا کچھ وقت کسی یونیورسٹی میں لگالیں،  ہماری ٹیکنالوجی کو عدالتوں کی وجہ سے دھچکا لگا، 2014 کے عدالتی فیصلوں کے باعث ڈیجیٹل کمپنیوں سے ہمارا تعلق خراب ہوا جب کہ  پی ٹی اے نے ٹک ٹاک پر پابندی لگادی۔

فواد چوہدری نے کہا کہ ہمیں ضرورت نہیں کہ ہم سب کے بچوں کے ماں باپ بن جائیں، عبایا لینے والے عبایا لیں اور جینزپہننے والےجینزپہنیں، ہمیں پابندی نہیں لگانا چاہیے۔

فواد چوہدری کا کہنا تھا کہ جب تک ریاستی پالیسیاں نہیں بدلیں گے اس وقت تک ملک میں سرمایہ کاری نہیں آئے گی، سیاسی اور معاشی آزادی انسان کی زندگی بناتی ہے، کام وہ کریں جو آپ پسند کریں، جسے پڑھنے کا شوق ہے وہ پڑھیں اور جسے ویڈیو کا شوق ہے ویڈیو کھیلیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ وہ دور گئے کہ پڑھو گے لکھو گے بنو گے نواب، آج تو 20 سال کا شخص ارب پتی بن جاتا ہے۔