Type to search

خبریں صحت فيچرڈ

نواز شریف کو ایک بار پھر دل کی تکلیف

پاکستان مسلم لیگ نواز کی رہنماء مریم نواز نے کہا ہے کہ ان کے والد کی طبیعت انتہائی ناساز ہے جنہیں گزشتہ ایک ہفتے کے دوران چار بار انجائنا کی تکلیف ہوئی ہے۔

سابق دخترِ اول نے کوٹ لکھپت جیل سے واپسی پر ٹویٹ کیا:”میری کوٹ لکھپت جیل میں آج میاں نواز شریف کے ڈاکٹروں سے ملاقات ہوئی ہے۔ میری ملاقات جاری تھی کہ میاں نواز شریف کو انجائنا کی تکلیف ہوئی جس پر انہوں نے نائٹریٹ سپرے طلب کیا۔ انہوں نے اس وقت مجھے بتایا کہ گزشتہ ہفتے بھی انہیں چار بار انجائنا کی تکلیف ہوئی ہے۔ انہوں نے ایک بار پھر اپنا پرانا مؤقف دہرایا کہ وہ اس بارے میں کسی سے رپورٹ کریں گے اور نہ ہی شکایت۔‘‘

مریم نواز شریف نے اپنی بات جاری رکھتے ہوئے کہا:’’نواز شریف کو جب کئی دنوں کے لیے ہسپتال لے جایا گیا تو تب بھی ان کا کوئی علاج نہیں کیا گیا۔ انہوں نے کہا کہ وہ (نواز شریف) عذر تراش کر ہسپتال میں نہیں رہنا چاہتے یا ان کی ایسی کوئی منشا نہیں ہے۔‘‘

مریم نواز شریف نے ایک بار پھر حکومت سے سابق وزیراعظم کے علاج کا مطالبہ کیا۔

انہوں نے ایک اور ٹویٹ میں کہا:’’میاں نواز شریف تین بار وزیراعظم رہ چکے ہیں لیکن حکومت ان کی صحت کے حوالے سے سردمہری برت رہی ہے جو قابلِ تشویش ہے۔ میں اور میرا خاندان ان کی دن بدن بگڑتی صحت پر بہت زیادہ تشویش کا شکار ہے۔ ان کی گرتی ہوئی صحت ان کی زندگی کے لیے خطرات پیدا کر رہی ہے۔‘‘

مریم نواز شریف نے کہا:’’یہ ایک طبی حقیقت ہے کہ انجائنا کی تکلیف دل کی بیماری کو مزید بڑھاوا دیتی ہے اور یہ مرض مزید شدت اختیار کر جاتا ہے۔ خدانحواستہ اگر ان کے ساتھ کچھ ہو جاتا ہے تو میں کس پر الزام دھروں گی یا کون اس کا ذمہ دار ہو گا؟ میں ایک بار پھر اپنا مؤقف دہراؤں گی کہ حکومتی سردمہری تشویش ناک ہے۔‘‘

نواز شریف  دسمبر2018ء سے لاہور کی کوٹ لکھپت جیل میں پابندِ سلاسل ہیں۔

Tags:

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *