Type to search

خبریں فيچرڈ معیشت

بارشوں کے باعث گندم کی دو لاکھ ٹن سے زائد فصل تباہ ہونے کا خدشہ

صوبہ خیبرپختونخوا اور پنجاب میں ہونے والے شدید بارشوں کے باعث پہلے سے ہی مشکلات کا شکار قومی معیشت کے لیے بحرانی صورت حال پیدا ہو گئی ہے کیوں کہ ماہرین کی جانب سے ان خدشات کا اظہار کیا جا رہا ہے کہ حکومت کے لیے رواں برس گندم کا 25 اعشاریہ 51 ملین ٹن پیداوار کا ہدف حاصل کرنا ممکن دکھائی نہیں دے رہا۔

اگرچہ محکمہ موسمیات نے بارشوں کے سلسلے کے ختم ہونے کی پیش گوئی کی ہے تاہم گزشتہ تین روز کے دوران ملک کے مختلف حصوں میں ہونے والی بارشوں، ژالہ باری اور آندھی کے باعث گندم کی فصل اور بلوچستان اور سندھ میں پھلوں کے باغات کو ناقابل تلافی نقصان پہنچا ہے۔

پنجاب کے محکمہ زراعت کا کہنا ہے کہ صرف پنجاب میں دو لاکھ ٹن سے زائد گندم تباہ ہونے کا خطرہ ہے۔

نیشنل ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی کے مطابق، بارشوں کے حالیہ سلسلے کے باعث ملک بھر میں 50 اموات ہوئی ہیں اور ایک اندازے کے مطابق 117 مکانات تباہ ہوئے ہیں جب کہ انفراسٹرکچر کو بھی بڑے پیمانے پر نقصان پہنچا ہے۔

یہ بھی پڑھیں: اشرف المخلوقات اور ماحولیاتی تبدیلی

وفاقی وزیر برائے فوڈ سکیورٹی و ریسرچ صاحبزادہ محبوب سلطان نے کہا ہے کہ صوبائی حکومتوں کو نقصانات کا تخمینہ لگانے کی ہدایت کر دی گئی ہے۔

وفاقی وزیر کا کہنا تھا کہ انہیں پنجاب کے مختلف اضلاع میں فصلوں کو پہنچنے والے نقصانات کے بارے میں آگاہ کیا گیا ہے جب کہ خیبرپختونخوا حکومت نے بھی بارشوں سے صوبے میں ہونے والے نقصانات کے بارے میں معلومات فراہم کی ہیں۔

محکمہ زراعت کے حکام کے مطابق، بارش اور ژالہ باری کے باعث صوبے کے 15 اضلاع میں گندم کی فصل کو نقصان پہنچا ہے۔

 

Tags:

You Might also Like

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *