Type to search

خبریں فيچرڈ کھیل

نیمار نے خود پر لگے ریپ کے الزامات مسترد کر دیے

برازیل کے عالمی شہرت یافتہ فٹ بالر اور فرانسیسی کلب پیرس سینٹ جرمین کے فارورڈ نیمار نے خود پر لگے ریپ کے تمام الزامات کو یکسر مسترد کر دیا ہے۔

سائو پائولو پولیس میں درج شکایت کے مطابق، دنیا کے مہنگے ترین فٹ بالر پر خاتون پر جنسی حملہ کرنے کا الزام ہے۔

نیمار نے اپنے انسٹاگرام اکائونٹ پر ویڈیو جاری کرتے ہوئے ان الزامات کی تردید کی اور کہا، مجھ پر ریپ کا جھوٹا اور بے بنیاد الزام لگایا گیا ہے۔ یہ بہت بڑی بات ہے مگر ایسا ہی ہوا ہے۔

انہوں نے کہا، مجھے یہ الزامات سن کر حیرت ہوئی۔ یہ الزام بہت گھنائونا اور افسوس ناک ہے کیوں کہ جو میری شخصیت کے بارے میں جانتا ہے، اسے یہ معلوم ہے کہ میں کیسا ہوں اور وہ یہ بھی جانتا ہے کہ میں ایسا کرنے کا کبھی سوچ بھی نہیں سکتا۔

ویڈیو میں نیمار نے خاتون کے ساتھ واٹس ایپ پر ہونے والے گفتگو بھی دکھائی جس میں خاتون نے فٹ بالر کو مبینہ طور پر اپنی برہنہ تصویریں بھی بھیجی تھیں۔

انہوں نے کہا، ایسا کرنا مناسب نہیں تھا لیکن اب تصویروں کو عوام کے سامنے لانا ضروری ہو گیا تھا تاکہ میں یہ ثابت کر سکوں کہ ایسا کچھ نہیں ہوا۔

واضح رہے کہ برازیلی خاتون، جن کی شناخت نہیں ہو سکی، نے اپنے انسٹاگرام اکائونٹ پر نیمار پر یہ الزام عائد کیا تھا کہ کچھ عرصہ میسیجز پر بات کرنے کے بعد نیمار نے انہیں پیرس میں ملاقات کے لیے بلایا تھا۔

شکایت گزار خاتون کا کہنا تھا، نیمار نے مجھے نشہ آور چیز کھلائی اور باتیں کرتے کرتے پرتشدد ہو گئے اور میری مرضی کے بغیر مجھ سے جنسی تعلقات استوار کر لیے۔

 

Tags:

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *