Type to search

خبریں سیاست فيچرڈ

اسٹيبلشمنٹ سے لڑنا ديوار ميں سر مارنے کے مترادف ہے ہم ان سے نہيں لڑ سکتے، شہباز شریف پھٹ پڑے

لیگی رہنما شہباز شریف نے کہا ہے کہ نواز شریف سے گزارشات کر کرکے تھک گيا ہوں ليکن وہ نہيں سنتے، میں اب بھی آزادی مارچ ميں شرکت کے خلاف ہوں۔

ن ليگ کے اجلاس میں رہنماؤں سے گفتگو میں اپوزیشن لیڈر شہباز شریف کا کہنا تھا کہ گزارشات کر کرکے تھک گيا ليکن نوازشريف نہيں سنتے، ميرا بھائی ميری نہيں مانتا ميں کيا کروں؟ بات نہ مان کر اہم مواقع پر نقصان بھی اٹھايا ۔

ان کا کہنا تھا کہ کئی مرتبہ کہا کہ اسٹيبلشمنٹ سے لڑنا ديوار ميں سرمارنے کے مترادف ہے ہم نہيں لڑسکتے اور ہر مرتبہ اپنا ہی نقصان کرتے ہيں،اس مرتبہ بھی يہی ہوگا اسلئے آزادی مارچ ميں شرکت کے خلاف ہوں ۔

شہباز شریف نے کہا کہ پچھلے دور حکومت ميں بھی سمجھاتارہا، نہ لڑيں، پرويزمشرف کو تبديل کرنے سے بھی منع کيا تاہم نہيں سنی گئی، ميں نے کہا جنرل جہانگيرکرامت کو نہ ہٹاؤ نہيں مانی گئی۔

انہوں نے کہا کہ اگردو يا تين ٹرم مسلسل خدمت کرليتے تو لوگ ہمارے ليے بھی نکلتے، سمجھاتا رہا ابھی نہ لڑيں اور مزيد حکومت کريں، اردوان نے15سال ملک کی خدمت کی اسی لئے لوگ نکلے۔

Tags:

You Might also Like

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *