Type to search

خبریں سیاست قومی

نواز شریف کا نام ای سی ایل سے نکالا جائے گا یا نہیں؟

  • 19
    Shares

سابق وزیراعظم نواز شریف کا نام ایگزٹ کنٹرول لسٹ سے نکالنے پر قومی احتساب بیورو نے اپنی رائے دینے سے انکار کرتے ہوئے کہا ہے کہ وفاقی حکومت کسی بھی شخص کا نام ای سی ایل سے نکالنے کی مجاز ہے، اب یہ فیصلہ وفاقی کابینہ  کرے گی۔

تفصیلات کے مطابق نواز شریف کا نام ای سی ایل سے نکالنے کے معاملے پر وفاقی کابینہ کی ذیلی کمیٹی برائے ایگزٹ کنٹرول لسٹ کا اجلاس آج وفاقی وزیر قانون بیرسٹر فروغ نسیم کی زیر صدارت ہو گا۔ ذیلی کمیٹی اپنی سفارشات وفاقی کابینہ کو پیش کرے گی جس پر آج ہی وزیراعظم عمران خان اور اُن کی کابینہ کی جانب سے فیصلے کا امکان ہے۔

دوسری جانب وفاقی وزیر برائے سائنس اینڈ ٹیکنالوجی فواد چوہدری کا کہنا ہے کہ کابینہ کے تمام اراکین نواز شریف کو بیرون ملک جانے کی اجازت دینے کے حامی نہیں ہیں۔

انہوں نے کہا کہ میرے خیال میں سب وفاقی وزرا کا نواز شریف کو باہر بھیجنے کے فیصلے پر حامی ہونا مشکل ہے۔

اس حوالے سے حکومت کی اتحادی سیاسی جماعت مسلم لیگ (ق) کے صدر چوہدری شجاعت حسین نے کہا ہے کہ نوازشریف کے علاج کی خاطر باہر جانے کے معاملے کو سرکاری گورکھ دھندے میں نہ الجھایا جائے، نواز شریف کی درخواست پر انسانی ہمدردی کی بنیاد پر فیصلہ کیا جائے۔

چوہدری شجاعت حسین نے ایک بیان میں کہا کہ کسی کی بیماری پر سیاست نہیں کرنا چاہیے۔ وزیراعظم عمران خان اور وفاقی کابینہ کو چاہیے کہ نواز شریف کا نام ای سی ایل سے نکالنے کے لیے بڑے دل کا مظاہرہ کریں۔

خیال رہے کہ سابق وزیراعظم نواز شریف کا نام ایگزٹ کنٹرول لسٹ سے نکالا جائے گا یا نہیں؟ فیصلہ آج وزیراعظم عمران خان اور اُن کی کابینہ کرے گی۔

Tags:

You Might also Like

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *