Type to search

بڑی خبر تعلیم خبریں

انٹرنیشنل اسلامک یونیورسٹی میں طلبہ تنظیموں میں تصادم، طالب علم جاں بحق

اسلام آباد کی انٹرنیشنل اسلامک یونیورسٹی میں 2 طلبہ تنظیموں میں تصادم کے واقعے میں ایک طالب علم جاں بحق اور 13 زخمی ہوگئے۔

پولیس کے مطابق تصادم میں طفیل نامی طالب علم زخمی ہو جو بعد ازاں چل بسا۔

اس حوالے سے ترجمان جماعت اسلامی راشد عمر اولکھ کا کہنا ہے کہ انٹرنیشنل اسلامک یونیورسٹی میں جمعیت کی تقریب پرسرائیکی اسٹوڈنٹ کونسل نے حملہ کیا، اسلامی جمعیت طلبہ کے 3 طلبہ فائرنگ سے زخمی ہوئے۔

ترجمان جماعت اسلامی نے بتایا کہ حملے کے وقت نائب امیر جماعت اسلامی لیاقت بلوچ تقریب سے خطاب کررہے تھے، نائب امیر جماعت اسلامی لیاقت بلوچ حملے میں بال بال بچ گئے۔

ترجمان کا مزید کہنا تھا کہ حملے میں اسلامی جمعیت طلبہ کے 4 افراد زخمی ہوئے جنہیں اسپتال منتقل کیا گیا، لیاقت بلوچ پر حملے کی شدید مذمت کرتے ہیں۔

ترجمان نے بتایا کہ حملے میں اسلامی جمعیت طلبہ کا طفیل نامی طالب علم جاں بحق ہوا، حملے میں لیاقت بلوچ کے قریب کھڑے ایک اسٹوڈنٹ کی ٹانگ اور دوسرے کے پیٹ میں گولیاں لگیں۔

ترجمان کے مطابق حملے کے بعد لیاقت بلوچ کو عقبی دروازے سے بحفاظت نکال لیا گیا۔

انہوں نے بتایا کہ فائرنگ کا سلسلہ وقفے وقفے سے جاری ہے جس میں اسلامی جمعیت طلبہ کے زخمی طالبعلموں کے تعداد 13 ہوگئی ہے۔

رینجرزکو طلب کرلیاگیاہے،ڈپٹی کمشنراسلام آباد

ڈپٹی کمشنر اسلام آباد کا اس حوالے سے کہنا ہے کہ اسلام آباد کی یونیورسٹی میں دو طلبہ تنظیموں میں تصادم ہوا، تصادم میں ایک طالب علم جاں بحق ہوگیا۔

ڈپٹی کشمنر نے بتایا کہ ہم نےیونیورسٹی میں سیکیورٹی سنبھال لی ہے، پولیس اور مجسٹریٹس تعینات کردیے ہیں جبکہ رینجرز کو  بھی طلب کرلیا گیا ہے۔

انہوں نے بتایا کہ یونیورسٹی کےکمپاؤنڈ میں تلاشی مکمل کرلی گئی ہے۔

Tags:

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *