Type to search

خبریں سیاست فيچرڈ قومی

پاکستان کو اسلام فوبیا کے مقابلے کے لیے مجوزہ سہ ملکی ٹی وی چینل منصوبے سے الگ کر دیا گیا

  • 4.6K
    Shares

پاکستان کو اسلام فوبیا کے مقابلے کے لیے مجوزہ سہ ملکی ٹی وی چینل منصوبے سے الگ کر دیا گیا ہے۔

کوالالمپورسمٹ کے اعلامیے کے مطابق اب ترکی اور ملائیشیا کے علاوہ  قطر مل کر چینل بنائیں گے۔

واضح رہے کہ جب اسلام فوبیا کے مقابلے کے لیے چینل بنانے کی تجویز پیش کی گئی تھی تو اعلان ہوا تھا کہ پاکستان، ملائیشیا اور ترکی مل کر یہ چینل بنائیں گے۔ تاہم اب تازہ اطلاعات کے مطابق پاکستان کو اس منصوبے سے الگ کر دیا گیا ہے۔

خیال رہے کہ پاکستان کے وزیراعظم نے دورہ سعودی عرب کے بعد دورہ ملائیشیا منسوخ کر دیا تھا۔

یاد رہے کہ وزیراعظم عمران خان نے ٹویٹر پر اسلام فوبیا سے مقابلے کے لیے سہ ملکی چینل بنانے کا اعلان کیا تھا۔ عمران خان نے اپنی ٹویٹ میں لکھا تھا کہ ان کی رجب طیب اردوان اور مہاتیر محمد سے اہم ملاقات ہوئی ہے جس میں انھوں نے فیصلہ کیا ہے کہ مشترکہ طور پر ایک انگریزی چینل شروع کیا جائے گا۔

وزیر اعظم نے مزید لکھا تھا کہ انگریزی زبان کے چینل کا مقصد اسلام فوبیا کا مقابلہ کرنا ہے، اور دنیا کو اسلام کے بارے میں آگاہی دینا ہے، چینل کا مقصد عظیم مذہب اسلام کے بارے میں غلط تاثر کا خاتمہ ہے۔

انھوں نے کہا تھا ایسی تمام غلط فہمیوں کا ازالہ کیا جائے گا جو لوگوں کو مسلمانوں کے خلاف یک جا کرتی ہیں۔

Tags:

You Might also Like

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *