Type to search

جرم شو بز میڈیا

اداکارہ فضہ علی پر پارکنگ لاٹ میں مشتعل خاتون کا حملہ

’میں کرنل کی بیٹی ہوں، میرا بندہ ایس ایچ او ہے، میں تمہیں اٹھوا دوں گی، میں تمہیں ننگا کروا دوں گی‘۔ یہ الفاظ شوبز سٹار فضہ علی کے بقول اس خاتون نے فضہ علی سے کہے جس نے گذشتہ روز پارکنگ لاٹ میں گاڑی ہٹانے کا کہنے پر اپنی کار سے اتر کر اس پر حملہ کر دیا۔ ’’مجھے اپنی ویڈیو بناتے دیکھ کر وہ سخت اشتعال میں اپنی کار سے اتری اور یہ کہتے ہوئے شدید غصے میں میری طرف لپکی کہ ’یہ تم فون پہ کیا کر رہی ہو؟ یہ فون پہ کیا بنا رہی ہو؟‘ اس نے میرا نقاب کھینچ کر میرا چہرہ ننگا کیا اور میرے بال نوچے مگر چہرے سے نقاب ہٹ جانے پر جب پہچان لیا کہ میں شوبز سٹار فضہ علی ہوں تو وہ سہم گئی‘‘۔

یہ پورا قصہ اداکارہ فضہ علی نے واقعہ کی ویڈیو کے ساتھ اپنے instagram اکاؤنٹ پر بیان کیا ہے جس میں اس کا کہنا ہے کہ متذکرہ خاتون جو اسلام آباد کی نمبر پلیٹ والی ایک مرسڈیز کار میں بیٹھی تھی، خود کو کوئی ملکہ سمجھ رہی تھی جس کی بدتمیزی سے وہ دو سکیورٹی گارڈز بھی محفوظ نہیں رہے جو اسے گاڑی ہٹانے کا کہنے اس کے پاس گئے تھے۔

فضہ علی کے بقول وہ اسپتال سے اپنی 5 سالہ بچی کا چیک اپ کروا کے لوٹی تھی، جب پارکنگ لاٹ میں وہ اپنی کار نکالنے لگی تو اس نامعلوم خاتون کی غلط پارک شدہ کار اس کی گاڑی کے آگے لگی ہوئی تھی، پیچھے دیگر گاڑیوں والے ہارن پہ ہارن بجا رہے تھے اور وہ خود چیخ چیخ کر اس خاتون سے اپنی کار تھوڑا پیچھے کرنے کا کہہ رہی تھی ‘مگر یہ مغرور خاتون ٹس سے مس نہیں ہو رہی تھی، اس نے جب مجھ پر حملہ کیا، میرا فون چھین کر گرا دیا اور میرے ساتھ ہاتھا پائی کرنے لگی تو واقعہ کی باقی ویڈیو میری ملازمہ نے بنائی جب کہ میری معصوم بچی یہ سب دیکھ کر بری طرح سہم گئی جو ابھی تک سکتے کی حالت میں ہے‘۔

 

View this post on Instagram

 

This is how our ELITE CLASS lives during the month of HOLY RAMADAN I was on my way back from the hospital after getting my daughter checked from the doctor, as i reached my parked car it was blocked by a car next to me, i waited her to go lil bak so that I can leave as behind my other cars wer also giving me horns to move and twice Securety guards also went to request this lady to pLz go lil bak but she did batameezi with that poor labours.I honked several times at that lady to move her car so that I could go home but she was showing me middle Fingures from the car and was saying u all cars move bak didn’t move in arrogance like she owned that parking spot. I was even joking in a light funny mood that mai corona test karwakar ai ho I’ll touch ur car other wise but she was in her anger And she was standing rong way all the other cars behind me can’t move bak but She drove a Mercedes Car with Islamabad number.and she feels she is a queen and we all should go bak After confronting her I realised she wasn’t fasting and didnt scared of even men around and she was chewing a gum she even assaulted me by throwing my phone away and started hitting me badly abusing me by saying bitch so my maid took the rest movie from my fone as I have a right to record publicly.that to people to know that no matter who you are or which car you drive people should be polite and not abusive also with poor guards she was acting bad My child was Scared and I was worried about her but that woman kept her arrogance but didn’t move her car. Rather when she came to know about who I was while she’s took my naqab from my face while pulling my hair badly she covered her face and sat still in her car. Why is that the time she was thinking that m a normal person she was hitting me abusing me and when she got to k ow that m Fiza ali m a show biz person she got scared Not just this she also threatened me by saying “ MAI COLONEL KI BETI HOON MERA BANDA SHO HAI MAI TUME UTHWA DU GI MAI TUME NANGA KRWA DU GI” And also abused me aur she was acting like a Man and i got beaten by her as I was fasting so I refrained from saying anything in response.my 5 years old daughter is in big troma rig

A post shared by Fiza Ali (@fiza_aali) on

اداکارہ نے اپنے تحریری پیغام میں مزید کہا ’’اس نے مجھے گندی گالیاں دیں۔ مجھے bitch اور نہ جانے کیا کیا بولتی رہی۔ وہ مردوں کی طرح گالیاں بک رہی تھی‘‘۔ فضہ علی کا کہنا ہے کہ ’میں روزے سے تھی اور بار بار اسے کہہ رہی تھی کہ رمضان کا مہینہ ہے، میرا روزہ ہے مجھے نہ ستاؤ مگر وہ روزے سے نہ تھی اور چیوئنگ گم چبا رہی تھی۔ میں نے اسے مذاق میں یہ بھی کہا کہ میں کرونا کا ٹیسٹ کروا کے آ رہی ہوں، تمہاری گاڑی کو چھو کر تمہیں بھی وائرس لگا دوں گی مگر اس کا گھمنڈ کم ہونے میں ہی نہیں آ رہا تھا‘‘

Tags:

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *