Type to search

انٹرٹینمنٹ خبریں قومی میڈیا

عامر لیاقت کا عرفان خان سے متعلق بے حسی پر مبنی بیان سوشل میڈیا پر وائرل

پاکستان تحریک انصاف کے ممبر قومی اسمبلی و رمضان نشریات کے میزبان ڈاکٹر عامر لیاقت کا مرحوم اداکار عرفان خان سے متعلق بے حسی پر مبنی بیان سوشل میڈیا پر وائرل، بیان پر سوشل میڈیا صارفین کی جانب سے سخت تنقید کی جا رہی ہے۔

بالی ووڈ کے نامور اداکار عرفان خان جن کا حال ہی میں انتقال ہوا ہے، عامر لیاقت نے اپنے پروگرام میں ان کی موت کو مذاق بنا دیا۔ ایکسپریس انٹرٹینمنٹ کے پروگرام جیوے پاکستان میں معروف اداکار عدنان صدیقی سے بات کرتے ہوئے ڈاکٹر عامر لیاقت نے کہا کہ دو انسان بچ گے ایک رانی مکھر جی اور ایک بپاشا۔ اس کے بعد انہوں نے عدنان صدیقی سے سوال کیا کہ پوچھیں کیسے بچ گئے۔ تو عدنان نے جواب دیا کہ یہ مجھے نہیں پتا کے کیسے بچ گئے۔ اس پر عامر لیاقت نے جواب دیتے ہوئے کہا کہ آپ نے موم (فلم) میں کام کیا سری دیوی کا انتقال ہو گیا۔ آپ نے عرفان خان کے ساتھ کام کیا ان کا انتقال ہو گیا۔ اب آپ کو مردانی 2 (فلم) میں آفر ہوئی تھی آپ نے کام نہیں کیا ورنہ وہ بھی جاتیں۔ اور اس کے علاوہ آپ کو جسم 2 (فلم) میں بھی آفر ہوئی تھی آپ نے کام نہیں کیا تو یہ دونوں (رانی مکھر جی، بپاشا) کی زندگیاں آپ کی بدولت ہیں۔ باہر آپ جس کے ساتھ کام کرتے ہیں وہ چلا جاتا ہے۔

عامر لیاقت کی اس گفتگو پر عدنان صدیقی نے کہا کہ آپ اس کو مذاق لے رہے ہیں لیکن یہ دونوں میرے بہت قریب ہیں۔ اور عرفان صاحب کا تو ابھی حال ہی میں انتقال ہوا ہے۔ اس کے بعد عدنان صدیقی نے بتایا کہ ہاں مجھے دو فلموں (مردانی 2، جسم 2) میں آفر ہوئی تھی۔

واضح رہے کہ بالی ووڈ کے معروف اداکار عرفان خان کا ممبئی کے ایک ہسپتال میں علاج کے دوران انتقال ہو گیا تھا، اداکار کو منگل 28 اپریل کو طبیعت بگڑنے کے بعد ممبئی کے کوکلا بین ہسپتال میں داخل کيا گیا تھا اور 29 اپریل کی صبح ان کا انتقال ہوا۔ عرفان خان گذشتہ تقریباً دو برس سے دماغ کے ٹیومر کے مرض میں مبتلا تھے۔ پہلی بار 2018 میں جب انہیں اس بیماری کا پتہ چلا تو وہ علاج کے لیے لندن گئے تھے اور کئی ماہ کے علاج کے بعد واپس آئے تھے۔ عرفان خان کے پسماندگان میں اہلیہ اور دو بیٹے ایان اور بابیل شامل ہیں۔

Tags:

You Might also Like

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *