Type to search

انسانی حقوق انصاف جرم خبریں

عظمیٰ خان کیس میں نامزد ہونے کے باوجود ملک ریاض کی بیٹی پشمینہ ملک مبینہ طور پر ملک سے فرار

پچھلے کئی دنوں سے پاکستان کے قومی منظر پر اداکارہ عظمیٰ خان تشدد کیس چھایا ہوا ہے جس میں ملک کے بااثر ترین رئیل اسٹیٹ ٹائیکون ملک ریاض کی بیٹی بھی ملوث ہے۔

اب اس کیس میں نئی پیش رفت سامنے آئی ہے اور عظمیٰ خان کے وکیل حسان نیازی نے ٹویٹ کرتے ہوئے دعویٰ کیا ہے کہ عظمیٰ خان تشدد کیس کی ایف آئی آر میں نامزد ملزمہ اور ملک ریاض کی بیٹی پشمینہ ملک، ملک چھوڑ کر فرار ہر چکی ہیں۔ انہوں نے لکھا کہ ملک ریاض کی بیٹی جو کہ عظمیٰ خان کیس میں نامزد ہیں ملک چھوڑ کر جا چکی ہیں۔ لاہور پولیس کے اہلکاروں نے پشمینہ کو گرفتار کرنے کی زحمت  نہیں کی جس نے اپنی ضمانت بھی نہیں کروائی تھی۔ انہوں نے لکھا کہ یہ آئی جی پنجاب کی ناکامی ہے۔ یوں لگتا ہے جیسے ہمارے صوبے کا کوئی آئی جی نہیں۔ 

گذشتہ روز اداکارہ نے لاہور پریس کلب میں پریس کانفرنس کے دوران  کہا تھا کہ  گذشتہ ہفتے چاند رات پر ملک ریاض کی بیٹیوں کی جانب سے  انکے گھر پر دھاوا بولا گیا اور انہیں حبس بے جا میں رکھتے ہوئے گن پوائنٹ پر مار پیٹ کا نشانہ بنایا گیا۔ انہوں نے کسی بھی قسم کی صلح یا معافی کے امکان کو رد کرتے ہوئے کہا کہ وہ انصاف کے لئے لڑیں گی۔

انکے وکیل نے پریس کانفرنس کے دوران کہا کہ آمنہ عثمان کے الزامات درست نہیں کہ وہ گھر جس پر دھاوا بولا گیا وہ انکے شوہر عثمان ملک کا تھا بلکہ وہ گھر عظمیٰ خان کے دوست بابر نسیم کے نام پر کرایہ پر حاصل کیا گیا تھا جس کے عظمیٰ خان کے زیر استعمال ہونے کے تمام دستاویزی ثبوت موجود ہیں۔ 

ملک ریاض کی بیٹی کی جانب سے ملک سے باہر جانے کے حوالے سے تا حال کوئی وضاحت سامنے نہیں آئی نہ ہی اس حوالے سے لاہور پولیس نے کوئی بیان جاری کیا ہے۔

Tags:

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *