Type to search

خبریں قومی مذہب

خلیفہ عمر بن عبدالعزیز کے مزار کی تباہی کے حوالے سے جھوٹی خبریں سوشل میڈیا پر وائرل

پاکستان میں سوشل میڈیا پر اس وقت یہ خبریں وائرل ہو رہی ہیں کہ شام کے شہر ادلب میں اموی خلیفہ عمر بن عبد العزیز اور ان کی اہلیہ کی قبور کی بے حرمتی کی گئی ہے۔ اس خبر کے سامنے آنے کے بعد ٹویٹر پر اس وقت #WakeUpUmmah4UmarBinAbdulAziz اور #عمرثانی_عمربن_عبدالعزیز کے ٹرینڈز ٹاپ کر رہے ہیں۔

سوشل میڈیا صارفین شدت پسندوں کی جانب سے عمر بن عبد العزیز اور ان کی اہلیہ کی قبور کی بے حرمتی پر سراپا احتجاج ہیں۔ سوشل میڈیا پر مختلف تصاویر اور ویڈیوز پھیلائی جا رہی ہیں جن میں شہید کی گئی قبریں دکھائی گئی ہیں لیکن ان میں کہیں یہ ثابت نہیں ہو رہا کہ یہ حضرت عمر بن عبدالعزیز اور ان اہلیہ کی قبریں ہیں۔

اس حوالے سے ایک ٹویٹر صارف نے اپنے ٹویٹ میں لکھا کہ سوشل میڈیا پر وائرل تصاویر پرانی ہیں اور اس میں نظر آنے والی قبروں کی بے حرمتی داعش والوں نے کی۔

 واضح رہے کہ سوشل میڈیا پر وائرل تصویر پہلی بار جنوری 2020 میں سامنے آئی تھی۔

واضح رہے کہ عمر بن عبد العزیز بن مروان بن حکم، خلافت بنو امیہ کے آٹھویں خلیفہ تھے اور سلیمان بن عبدالملک کے بعد مسند خلافت پر بیٹھے تھے۔ انہیں ان کی نیک سیرتی کے باعث پانچواں خلیفہ راشد بھی کہا جاتا ہے جبکہ آپ خلیفہ صالح کے نام سے بھی مشہور ہیں۔

Tags:

You Might also Like

2 Comments

  1. Amanullah مئی 30, 2020

    How pathetic your judgement is in start you quoted that it is not clear that weather it is the grave of Umer Bin AbulAziz and later in pic underlined jan 2020 it is clearly mention that Umer Bin AbulAziz shrine was targeted .. shame on uh.

    جواب دیں
  2. علی وارثی مئی 30, 2020

    You clearly have comprehension issues. The article says that the same propaganda was initiated in January as well. But it was propaganda then, and it is propaganda now.

    جواب دیں

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *