Type to search

Coronavirus خبریں

پاکستان میں طبی بحران: ‘ کرونا کیسز کی صورتحال ایسی رہی تو 10 سے 12 دنوں میں ہسپتالوں میں جگہ ختم ہوجائے گی’

 سندھ حکومت کے ترجمان مرتضیٰ وہاب نے آئندہ دنوں میں کرونا کیسز کی تعداد میں خطرناک حد تک اضافے کا خدشہ ظاہر کرتے ہوئے کہا ہے کہ جو حالات جا رہے ہیں ان میں اگلے 10 سے 12 روز میں سندھ کے ہسپتالوں میں گنجائش ختم ہوجائے گی۔

جیو نیوز کے پروگرام  میں مرتضیٰ وہاب نے کہا کہ عید کی چھٹیوں میں لوگوں نے احتیاط  نہیں کی جس وجہ سے کرونا کیسز کی تعداد آنے والے دنوں میں خطرناک حدتک بڑھ سکتی ہے۔ مرتضیٰ وہاب کا کہنا تھا کہ صورتحال بہت تشویشناک ہے۔ مریضوں اور اموات میں اضافہ ہورہا ہے، ہلاکتیں بتارہی ہیں کہ صورتحال کتنی خطرناک ہے، لوگوں کی ترجیح نجی ہسپتال ہیں لیکن وہاں بھی گنجائش ختم ہوچکی ہے مگر سرکاری ہسپتالوں میں کچھ گنجائش ہے اور وزیراعلیٰ  سندھ مراد علی شاہ اس گنجائش کومزید بڑھانے کی کوشش کررہے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ جس طرح سے تعداد بڑھ رہی ہے صورتحال خطرناک ہے اور مزید آنے والے دنوں میں ہوسکتی ہے۔  جس طرح پچھلے 10 روز میں کیسز آئے سب کے سامنے ہیں، آج سے 10 روز پہلے 16 سے 17 افراد وینٹی لیٹرز پر تھے جو اب 40 سے 50 ہوگئے ہیں، آئی سی یو میں بھی مریضوں کی تعداد 40 سے 80 تک جا پہنچی ہے۔

مرتضیٰ وہاب نے کہا کہ ملک بھرمیں 14روزسخت لاک ڈاؤن ہوجائےتو کافی حد تک قابو پاسکتےہیں لیکن لگتا نہیں کہ وفاقی حکومت سخت لاک ڈاؤن کی طرف جائےگی البتہ این سی سی اجلاس میں تمام حقائق وزیراعظم کےسامنے رکھیں گے۔

ترجمان نے مزید کہا کہ نیپا کراچی میں 200 بستروں پر مشتمل عارضی ہسپتال بنارہے ہیں۔ کراچی یونیورسٹی کے پاس بھی جگہ دیکھی ہے جہاں 50 بستر لگائیں گے اس کے علاوہ لیاری اور جنرل ہسپتال میں بھی بستروں کی تعداد بڑھارہے ہیں۔

Tags:

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *