Type to search

انصاف جرم حکومت خبریں

ریاستی اداروں کے ہاتھوں جبری طور پر لاپتہ بیٹے کے والد،معروف شاعر سائیں تاج جویو نے صدارتی ایوارڈ رد کردیا

جبری طور پر گمشدہ بیٹے کے والد  اور سندھی زبان کے معروف شاعر و محقق سائیں  تاج جویو نے  ریاست کی جانب سے صدارتی ایوارڈ قبول کرنے سے انکار کردیا ہے۔ سندھ کے معروف ادیب اورمحقق تاج جویو کے بیٹے، پروفیسر و محقق سارنگ جویو کو انکے گھر سے مبینہ طور پر سیکیورٹی ایجنسیوں نے  گھر سے اٹھا لیا تھا۔

اس حوالےسے تفصیلات منظر عام پر لاتے ہوئے سینئر صحافی و مدیر عباس ناصر نے ٹویٹ کی۔ انہوں نے پوچھا کہ یہ بے ہیمانہ جبر کی رات کب ختم ہوگی؟

یاد رہے کہ سارنگ جویو کے اہلخانہ نے بتایا کہ کراچی میں انکے گھر میں قانون نافذ کرنے والے اداروں نے دھاوا بولا اور انہیں یر غمال بنائے رکھا اور وہ سارنگ کو ساتھ لے گئے۔

یاد رہے سارنگ جویو ریاستی اداروں کے ہاتھوں جبری طور پر گمشدہ کیے جانے والے افراد کی بازیابی کے لئے  آواز اٹھا رہے تھے۔

وائس فار مسنگ پرسنز سندھ نامی تنظیم نے سارنگ کی گمشدگی پر آواز اٹھانے کا اعلان کرتے ہوئے احتجاج کا عندیہ دیا ہے ساتھ ہی غیر ملکی تنظیموں سے  بھی آواز اٹھانے کا مطالبہ کیا ہے۔

 

Tags:

You Might also Like

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *