Type to search

احتجاج خبریں مذہب

تحریک لبیک پاکستان نے اسلام آباد انتظامیہ سے مزاکرات کے بعد دھرنا ختم کردیا

یاد رہے کہ حال ہی میں فرانس کے متنازعہ میگزین چارلی ہیبڈو میں حضرت محمدﷺ کے خلاف کارٹون شائع کرنے کے خلاف کل تحریک لبیک پاکستان کی فیض آباد انٹر چینج کی جانب نکالی جانے والی ریلی نے آج فیض آباد انٹر چینج پر دھرنا دینا تھا۔

نیا دور کو موصول ہونے والی تازہ ترین اطلاعات کے مطابق آج ڈسٹرکٹ انتظامیہ سے مزاکرات کے بعد دھرنے کو ختم کر دیا گیا ہے۔

کل رات دھرنے کے شکاء سے خطاب کرتے ہوئے سید عنایت الحق شاہ سلطانپوری کا کہنا تھا کہ راولپنڈی انتظامیہ کی مجبوریوں کا احساسِ ہے مگر یہ ناموس رسالت کا مسلہ ہے۔ آپ سے کنٹینرز لگانے کی پوچھ ہو گی، لوگ گاڑیوں کے اندر پتھر رکھ کر اسلام آباد میں داخل ہوئے۔ ہم تو ناموس کے نام پر آپ کے پاس آئے ہیں،ہم فیض آباد کے پل پر اس لئے جانا چاہتے ہیں کہ یہاں ہماری یادیں ہیں۔ ُانکا مزید کہنا تھا کہ ہم نے رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کے مشن کو زندہ رکھا ہوا ہے۔

کل نکلنے والی ریلی کے شرکا کا مطالبہ تھا کہ فرانس کے ساتھ تمام سفارتی تعلقات ختم کیے جائیں اور فرانس کے سفیر کو فوری طور پر واپس بھیجا جائے۔ اس کے ساتھ ساتھ یہ مطالبہ بھی کیا گیا کہ تمام قومی و صوبائی اسمبلیوں میں اس اقدام کے خلاف قراردادیں منظور کی جائیں۔ ٹی ایل پی نے مزید مطالبہ کیا کہ اگر فرانس باز نہ آیا تو ہم عالمی جنگ کا اعلان کر دیں گے۔

Tags:

You Might also Like

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *