Type to search

خبریں قومی

ہیکرز نے 25 لاکھ کے الیکٹرک صارفین کا ڈیٹا چوری کرلیا

اطلاعات کے مطابق کے الیکٹرک کراچی ،جو کراچی کے لئے واحد بجلی فراہم کرنے والا ادارہ ہے ، نیٹ ورکر گروپ کے ہیکنگ اٹیک کا شکار ہوا ہے، جس کے نتیجے میں بلنگ اور آن لائن خدمات میں خلل پڑا ہے۔ اطلاعات کے مطابق کے الیکٹرک کے سسٹمز تک رسائی کو بحال کرنے کے لئے نیٹ ورکر نے $ 3.85 ملین ڈالر کا مطالبہ کیا ہے۔

کے الیکٹرک پاکستان کا سب سے بڑا بجلی فراہم کرنے والا ادارہ ہے ، جو 25 لاکھ صارفین کی خدمت کر رہا ہے اور 10 ہزار سے زیادہ افراد کو روزگار فراہم کرتا ہے۔۔

کل سے ، کے الیکٹرک صارفین اپنے اکاؤنٹ کے لئے آن لائن خدمات تک رسائی حاصل کرنے سے قاصر ہیں۔ اس مسئلے کو حل کرنے کے لیے لگتا ہے کہ کے الیکٹرک اسٹیجنگ سائٹ کے ذریعہ صارفین کو پھیلانے کی کوشش کر رہا ہے ، لیکن فی الحال انھیں مشکلات کا سامنا ہے۔

رینسم ویئر کے محقق رینسم لیکس نے اس حملے کے بارے میں ایک مقامی پاکستانی سیکیورٹی کمپنی کو بتایا تھا کہ اس حملے سے کے الیکٹرک کی داخلی خدمات متاثر ہو سکتی ہیں۔ ریورٹز کے مطابق ، سائبراٹیک سات ستمبر کی صبح پیش آیا اور اٹیک نے کے الیکٹرک کی آن لائن بلنگ خدمات کو متاثر کیا جبکہ بجلی کی فراہمی میں اس اٹیک سے کوئی فرق نہیں پڑا۔

 

 

Tags:

You Might also Like

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *