Type to search

انسانی حقوق خبریں خواتین

لاہور: سڑک پر کھڑی خاتون سے چھ افراد کی اجتماعی زیادتی ، پانچ دنوں بعد مقدمہ درج

لاہور کے علاقے مین جڑانوالہ روڈ پر تھانہ مانگٹانوالہ کے قریب بس خراب پونے پر لڑکی کو لفٹ دینے کے بہانے چھ ملزمان نے زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا۔ سفاک ملزمان نے خاتون کو زبردستی نشہ پلا کر زیادتی کا نشانہ بنایا۔ پولیس کے مطابق لڑکی بس خراب ہونے پر راستے میں اتر کر کسی نئی بس کا انتظار کر رہی تھی کہ ملزمان نے اسے لفٹ دینے کا جھانسہ دیکر اپنے ساتھ گاڑی میں بٹھا لیا۔ گاڑی میں سوار کر کے اسے زبردستی زدوکوب کرتے رہے اور نشہ آور ادویات پلا کر اسے مسلسل زیادتی کا نشانہ بناتے رہے اور پھر فرار ہوگئے۔

مانگٹانوالہ پولیس نے نا معلوم افراد کو پر مقدمہ درج کر لیا ہے تاہم ابھی تک کوئی گرفتاری عمل میں نہیں لائی جاسکی۔ پولیس کا کہنا ہے کہ یہ واقعہ 24ستمبر کو پیش آیا جبکہ 27 تاریخ کو خاتون نے ذیادتی کیخلاف درخواست دی۔ خاتون کا میڈیکل کروا کر مقدمہ درج کر لیا گیا ہے۔

وزیر اعلی پنجاب عثمان بزدار نے واقعے کا نوٹس لیتے ہوئے کہا کہ ملزمان کو جلد پکڑ کر کیفر کردار تک پہنچایا جائیگا۔ صوبائی وزیر فیاض الحسن چوہان نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا کہ پولیس اور دیگر ادارے ملزمان نے تعقب میں ہیں اور انہیں جلد گرفتار کر لیا جائیگا۔ ادھر آئی جی پنجاب نے آر پی او شیخوپورہ سے رپورٹ طلب کر لی ہے۔

یاد رہے کہ گزشتہ مہینے لاہور کی مین شاہراہ پر زیادتی کا یہ دوسرا واقعہ ہے۔ جبکہ لاہور موٹروے واقعے کا مرکزی ملزم دو ہفتے گزر جانے کے بعد ابھی تک گرفتار نہیں کیا جاسکا۔

Tags:

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *