Type to search

جمہوریت خبریں سیاست

کس پارٹی میں فارورڈ بلاک تیار ہے؟ فواد چودھری اور خواجہ آصف میں ٹھن گئی

پاکستان مسلم لیگ ن کے رہنماء خواجہ آصف اور وفاقی وزیر سائنس و ٹیکنالوجی فواد چوہدری کے درمیان دونوں بڑی جماعتوں کے اندر موجود فارورڈ بلاک کو لیکر ٹھن گئی ہے۔ گزشتہ روز وفاقی وزیرفواد چوہدری نے سیالکوٹ کا دورہ کرتے ہوئے اپنے خطاب میں کہا تھا کہ نواز شریف کی ہدایت پر ن لیگ کے زیادہ سے زیادہ 18 سے 20 لوگ مستعفی ہوں گے جبکہ دیگراستعفٰی نہیں دیں گے۔ انہوں نے کہا کہ خواجہ آصف بھی استعفٰی دینے کیلئے تیار نہیں ہیں اور نا ہی وہ نواز شریف کے بیانئیے کا ساتھ دے رہے ہیں۔ تاہم اس خبر پر تبصرہ کرتے ہوئے خواجہ آصف نے اپنے ٹوئیٹر سے فواد چوہدری کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ فواد چوہدری سے کوئی پوچھے کہ وہ کون سا وزیر تھا جس نے لندن فون کیا اور کہا کے میرے ساتھ 11 سے 12 تحریک انصاف کے ایم این ایز ھیں جو حکومت چھوڑنے کیلئے تیار بیٹھے ہیں لہذٰا آپ کچھ کریں۔ انہوں نے کہا کہ جن صاحب کو کو فون کیا گیا تھا وہ انکا نام بھی بتا سکتے ہیں.

تاہم ان دونوں پارٹیوں کے ترجمانوں کے ان بیانات سے نشاندہی کی جاسکتی ہے کہ کہیں نا کہیں کوئی فارورڈ بلاک موجود ہے۔ دیکھنا یہ ہوگا کہ کیا فواد چوہدری کے مطابق ن لیگ میں کوئی فارورڈ بلاک ہے یا خواجہ آصف کے مطابق حکمران جماعت تحریک انصاف میں۔ خواجہ آصف کے اس بیان سے اس بات کی تصدیق کی جاسکتی ہے کہ وہ اپنی پارٹی کے ساتھ کھڑے ہیں اور انکے اس جواب نے فواد چوہدری کی اس بات کی تردید کر دی ہے کہ خواجہ آصف استعفٰی دینے کیلئے پارٹی کے فیصلے کا ساتھ نہیں دیں گے۔  یاد رہے کہ خواجہ آصف اور فواد چوہدری کی اسمبلی فلور پر کئی دفعہ تکرار ہو چکی ہے۔

Tags:

You Might also Like

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *