Type to search

خبریں سیاست

دو اشخاص کے علاوہ بلوچستان پارٹی کی تنظیم وہیں کھڑی ہے، فرق نہیں پڑتا: احسن اقبال

پاکستان مسلم لیگ (ن) بلوچستان کے صدر لیفٹیننٹ جنرل (ر) عبدالقادر بلوچ اور سابق وزیراعلیٰ بلوچستان ثنا اللہ زہری نے پارٹی چھوڑنے کا با ضابطہ اعلان کر دیا ہے۔ اپنے کارکنان سے خطاب کرتے ہوئے عبدالقادر بلوچ نے کہا کہ سابق وزیراعظم و مسلم لیگ (ن) کے قائد نواز شریف کے خلاف جلسہ عام میں سخت زبان بھی استعمال کی ہے اور پاکستان دشمن بیانیہ تشکیل دیا۔

اس بات پر رد عمل دیتے ہوئے مسلم لیگ کے جنرل سیکرٹری احسن اقبال نے کہا کہ مسلم لیگ ن بلوچستان کی مکمل تنظیم اپنی جگہ کھڑی ہے، دو اشخاص کے نکل جانے سے کوئی تنظیمی نقصان نہیں ہوا جبکہ ثنااللہ زہری تو دو سال سے غیر فعال ہوچکے تھے۔

احسن اقبال کا مزید کہنا تھا کہ  ثنااللہ زہری خود پارٹی کے سامنے شرمندہ تھے کہ اپنی حکومت کا دفاع نہ کرسکے، ان کےہاتھوں اپنی حکومت ٹوٹ چکی تھی جس پر پارٹی نے ان کی سرزنش کی تھی، ثنا اللہ زہری نے پارٹی کو چھوڑا ہے تو یہ ان کا ذاتی فیصلہ ہے۔

احسن اقبال نے کہا کہ عبدالقادر بلوچ اور ثنا اللہ زہری نے خود حقائق سامنے رکھ دیئے ہیں  کہ اصل جھگڑا اسٹیج پر کرسی نہ ملنے کا تھا۔ انہوں نے کہا کہ ن لیگ جو تحریک چلارہی ہے وہ کسی سردار یا نواب کی اسٹیج پر کرسی سے بڑی ہے، مسلم لیگ ن کو اس طرح کے رویوں سے کوئی فرق نہیں پڑے گا۔

Tags:

You Might also Like

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *