Type to search

بین الاقوامی حکومت خبریں سیاست

سی پیک اتھارٹی اپنے قیام کے کسی قانونی جواز اور تحفظ کے بغیر چل رہی ہے: اسد عمر کا سینیٹ کو جواب

وفاقی وزیر برائے پلاننگ اینڈ ڈیویلپمنٹ اسد عمر نے سینیٹ میں ایک سوال کے جواب میں اعتراف کیا ہے کہ پاکستان کے لیئے گیم چینجر کہلانے والے سی پیک منصوبے کو تیز تر چلانے کے لیے بنائے جانے والی سی پیک اتھارٹی اس وقت اپنے قیام کے کسی قانونی جواز کے بغیر کام کر رہی ہے۔
انہوں نے جماعت اسلامی کے سینیٹر مشتاق احمد کے سوال کے حوالے سے تحریری جواب داخل کرایا تھا۔

جواب میں لکھا گیا ہے کہ سی پیک اتھارٹی آرڈیننس کا عرصہ معیاد 31 مئی 2020 کو ختم ہوگیا تھا۔ جس کے بعد سے اب اتھارٹی کے قیام کو کوئی قانونی تحفظ حاصل نہیں ہے۔ اتھارٹی کے مالی معاملات کے حوالے سے اپنے جواب میں انہوں نے کہا کہ یہ معاملات متعلقہ وزارتوں کے ذریعئے چل رہے ہیں۔

یا رہے کہ سی پیک اتھارٹی کا پہلا چئیرمین جنرل ر عاصم سلیم باجوہ کو تعینات کیا گیا تھا۔ تاہم انکے اثاثہ جات سکینڈل کے بعد سی پیک اتھارٹی اور اسکے چئیرمین کا کردار گم ہوگیا تھا۔

Tags:

You Might also Like

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *