Type to search

خبریں

صدارتی ریفرنس کیس: جسٹس قاضی فائز عیسیٰ نے سپریم کورٹ سے کیس کی سماعت براہ راست نشر کرنے کی استدعا کردی

  • 238
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
    238
    Shares

سپریم کورٹ کے جج جسٹس قاضی فائز عیسیٰ نے سپریم کورٹ سے استدعا کی ہے کہ انکے خلاف صدارتی ریفرنس کیس  کی سماعت کو ٹی وی پر براہ راست نشر کیا جائے۔ انہوں نے کہا کہ ان کے کیس میں انہیں مفلوج رکھا گیا کیونکہ وہ میڈیا سے بات چیت نہیں کر سکتے تھے اور ان کے مخالفین نے میڈیا میں ایسا ماحول اور بیانیہ تشکیل دیا جس سے انکی شخصیت کے بارے میں ابہام پیدا کیا جائے۔

انہوں نے  کینیڈا، امریکا، نیوزی لینڈ آسٹریلیا سمیت دنیا بھر سے عدالتوں کی مثالیں دیں جہاں ان کے بقول عدالت کی کارروائی ٹی وی پر لائیو دکھائی جاتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ  کیس کے حوالے سے مذکورہ حالات کے بعد وہ یہ درخواست کرنے میں اپنے آپ کو صحیح السمت پاتے ہیں کہ انکے کیس کی لائیو کوریج کو سرکاری ٹی وی چینل پی ٹی وی سے نشر کیا جائے اور اس حوالے سے عدالت پیمرا کو حکم جاری کرے کہ وہ تمام چینلز کو ہدایت کرے کہ وہ اس کا انتظام کریں گے اور اس کو روکیں گے نہیں۔

انہوں نے اپنی  استدعا میں  ان سب واقعات کا ذکر کیا ہے جس میں ان کے مطابق ان کی تذلیل کی گئی اور انہیں امید تھی کہ چیف جسٹس ساتھی جسٹس کی عزت کو قائم کروائیں گے لیکن ایسا نہیں ہوا۔ انہوں نے کہا کہ ان کے خاندان کا یک طرفہ میڈیا ٹرائل کیا۔

یاد رہے کہ قاضی فائز عیسیٰ کے خلاف صدر پاکستان عارف علوی نے اثاثہ جات سے متعلق ایک ریفرنس دائر کر رکھا ہے۔

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *