Type to search

خبریں

چین نے دیہی آبادی کو مکمل طور پر غربت سے نکال چکنے کا اعلان کردیا: 10 کروڑ افراد غربت کے گڑھے سے نکل آئے

چین کے صدر شی جن پنگ نے دیہی علاقوں میں غربت ختم کرنے کے لیے کی جانے والی کوششوں میں مکمل کامیابی حاصل ہونے کا اعلان کردیا۔

غیر ملکی خبر رساں ایجنسی رائٹرز کے مطابق چینی صدر کی جانب سے یہ اعلان دارالحکومت بیجنگ میں ایک تقریب کے دوران کیا گیا۔

تقریب سے خطاب میں چینی صدر اس سلسلے میں پارٹی قیادت کے عہد اور ملک کے سیاسی نظام سے اس میں حاصل ہونے والے فوائد کو سراہا۔

چین کے سرکاری میڈیا نے لگ بھگ 10 کروڑ افراد کو غربت سے نکالنے کی کوششوں میں کامیابی کا سہرا شی جن پنگ کی قیادت کے سر سجایا، اس سنگ میل کو عبور کرنے کا اعلان انہوں نے دسمبر میں کیا تھا اور اسے رواں سال حکمراں جماعت چائنیز کمیونسٹ پارٹی (سی سی پی) کی 100ویں سالگرہ کا تحفہ قرار دیا تھا۔

چین میں شدید غربت والے علاقوں میں ان کو شامل کیا جاتا ہے جہاں سالانہ فی کس آمدنی 4 ہزار یوآن (620 ڈالر) یا یومیہ 1.69 ڈالر سے کم ہوتی ہے، جبکہ عالمی بینک کی تعریف کے مطابق یہ سطح یومیہ 1.9 ڈالر ہے۔

شی جن پنگ کا کہنا تھا کہ چین نے گزشتہ 8 سال کے دوران غربت کے خلاف لڑائی میں 1.6 ٹرلین یوآن کی سرمایہ کاری کی ہے۔

اتوار کو ‘نمبر ایک پالیسی دستاویز’ کے عنوان سے جاری دستاویز نے چین نے غربت کے خاتمے کی اپنی پالیسیاں جاری رکھنے کا اعادہ کیا ہے۔

واضح رہے کہ پاکستانی وزیر اعظم عمران خان بھی ملک سے غربت کے خاتمے کا عزم ظاہر کرتے ہوئے کئی بار چین کی مثال دے چکے ہیں۔

انہوں نے کئی مواقع پر کہا کہ چین نے جس طرح غربت اور کرپشن پر قابو پایا ہے کسی ملک نے ایسا نہیں کیا جبکہ پاکستان غربت اور کرپشن کے خاتمے کے لیے چین کے تجربے سے فائدہ اٹھانا چاہتا ہے

Tags:

You Might also Like

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *