Type to search

تجزیہ

خان صاحب ریلیکس کریں،نیٹ فلکس پر فلمیں دیکھیں، بچوں کو بلا لیں، تازہ دم ہو کر کارکردگی دکھائیں:کامران خان

کامران خان اب تک تو ملک کے سینیر صحافی کے طور پر جانے جاتے تھے تاہم پچھلے 5 اور بالخصوص آخری اڑھائی سالوں میں وہ حکمران جماعت کی اس طرح حمایت اور مدح سرائی میں کھل کر سامنے آئے ہیں کہ اب وہ تحریک انصاف کے سینئر ترجمان ہی معلوم پڑتے ہیں۔یہ تو امر تو کسی سے چھپا نہیں کہ جس وقت عوام کی معاشی صورتحال دردناک تباہی کی جانب گامزن تھی وہ اسے مکمل طور پر درست اعر خان صاحب کی کامیابی قرار دیتے ہوئے ہر غریب کے زخموں پر نمک پاشی کرتےرہے ہیں۔ اور اب جبکہ تباہی ہو چکی ہے تو روز وزیر اعظم کو مصنوعی وارننگز جاری کر رہے ہیں اور ساتھ ہی پر امید ہیں کہ عمران خان ہی سب کچھ ٹھیک کردیں گے۔ حد تو یہ ہے کہ وہ اب انہیں بریک لے کر واپس آنے اور معیشت اور ملک کو بھر پور انداز میں چلانے کے مشورے دے رہے ہیں۔

ابھی کچھ ہی عرصہ پہلے کی بات ہے انکا ایک ڈرامائی انداز کے بیک گراونڈ میوزک کے ساتھ خان صاحب پر میٹھی میٹھی تنقید کرتا کلپ منظر عام پر آیا تھا اب ایک بار پھر وہ وزیر اعظم کو بتا رہے ہیں کہ انکے فیصلوں میں استحکام نہیں ہے۔ تازہ ترین ویڈیو ٹویٹ میں انہوں نے کہا ہے کہ خان صاحب آپ کے فیصلوں میں استحکام نہیں ہے۔ حفیظ شیخ کو اس وقت ہٹایا جاتا ہے جب وہ غیر ملکی سرمایہ کاری لانے کے لیئے سرمایہ کاروں سے زوم پر بات کررہے تھے۔ آپ انہیں چند دن پہلے استعفی نہ دینے پر منا رہے تھے۔ پھر حماد اظہر صاحب کو آپ نے عبوری وزیر خزانہ بنا دیا اور پھر اچانک خبر آئی کہ شوکت ترین کو انکی جگہ دی جائے گی۔ خان صاحب یہ بتا رہا ہے کہ آپ کے فیصلوں میں استحکام نہیں ہے۔

پھر کامران خان بھارت سے تجارت کے معاملے پر بننے والے تنازعہ جس میں کہ یہ معلوم ہوا کہ پہلے ای سی سی میں اسکی اجازت دی گئی اور پھر اسے مسترد کردیا گیا۔ اور مبینہ طور پر وزیر اعظم نے جب وزیر خزانہ سے استفسار کیا کہ یہ منظوری کیوں دی؟ تو انہوں نے کہا کہ آپ کے کہنے پر ہی دی۔ کامران خان کے مطابق یہ فیصلہ بھی بتا رہا کہ  فیصلوں میں کوئی ربط نہیں ہے۔

پھر کامران خان عمران خان کو کہتے ہیں کہ قسمت اور خدائی مہربانی آپکے ساتھ ہے آپ کرونا کی مشکلات سے بچ گئے ہیں ڈالر نیچے کی جانب گامزن ہے اور اپوزیشن تتر بتر ہے۔ ایسے میں آپ ریسٹ کریں بریک لے لیں۔ قاسم اور سلیمان کو بلا لیں۔ نیٹ فلیکس پر موویز دیکھیں اور تازہ دم ہو کر واپس آئیں اور تازہ دم ہو کر بالنگ کروائیں۔

Tags:

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *