Type to search

حکومت خبریں سیاست

این اے 249 ضمنی انتخاب: اے این پی کا امیدوار (ن) لیگ کے مفتاح اسمٰعیل کے حق میں دستبردار

این اے 249 میں ضمنی انتخاب کے لئے اے این پی کا (ن) لیگ کے مفتاح اسمٰعیل کے حق میں دستبرداری کا فیصلہ کر لیا ہے۔

این اے 249 ضمنی انتخاب کے لئے ن لیگ کے امیدوار مفتاح اسماعیل کا کہنا ہے کہ عوامی نیشنل پارٹی اور اس کے امیدوار کا شکر گزار ہوں جنہوں نے ہمارے حق میں دستبرداری کا فیصلہ کیا۔

ان کا کہنا تھا کہ ہمیں امید ہے کہ ان کے ووٹ سے ہم اس انتخاب میں کامیابی حاصل کرلیں گے۔

نواز شریف نے عوام کی خدمت کی اور ان ہی کی سنت پر عمل کرتے ہوئے این اے 249 کی خدمت کروں گا۔

انکا کہنا تھا کہ مسلم لیگ (ن) کی جانب سے اے این پی کا مشکور ہوں جو ہمارے حق میں اس نشست سے دستبردار ہوئے۔

حلقے میں مہم سازی کے دوران تلخ کلامی کے حوالے سے ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ مہینے قبل ایک سیاسی جماعت کے ورکر نے نواز شریف کو چور کہا جس پر میں آپے سے باہر ہوگیا اور انہیں گالی دی جو میری غلطی تھی تاہم کوئی کوئی نواز شریف کو چور کہے گا تو اسے جواب ضرور ملے گا۔

پیپلز پارٹی کی جانب سے حمایت کے لیے رابطے پر رد عمل کے حوالے سے سوال کے جواب میں مفتاح اسمعیٰل کا کہنا تھا کہ بلاول بھٹو زرداری نے کہا تھا کہ وہ مشاورت کرکے بتائیں گے تاہم ان کی طرف سے اب تک کوئی جواب نہیں آیا ہے۔

واضح رہے کہ عوامی نیشنل پارٹی (اے این پی) نے اپوزیشن اتحاد پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) سے علیحدگی اختیار کرلی ہے۔

پشاور میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے اے این پی کے مرکزی سینئر نائب صدر امیر حیدر ہوتی نے کہا کہ پارٹی کے مرکزی عہدیداروں اور اہم رہنماؤں کے ہنگامی اجلاس طلب کیا گیا جس کا ایجنڈا اے این پی کو بھیجا گیا جو شوکاز نوٹس تھا جس پر بحث کے بعد پارٹی نے پی ڈی ایم سے راہیں جدا کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

خیال رہے کہ پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) نے سینیٹ میں اپوزیشن لیڈر کے لیے بلوچستان عوامی پارٹی (بی اے پی) سے ووٹ لینے کے معاملے پر پاکستان پیپلز پارٹی (پی پی پی) اور عوامی نیشنل پارٹی (اے این پی) کو شوکاز نوٹس جاری کیے تھے۔

Tags:

You Might also Like

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *