تحریک لبیک کے سربراہ حافظ سعد رضوی کو لاہور سے گرفتار کر لیا گیا

تحریک لبیک کے سربراہ حافظ سعد رضوی کو لاہور سے گرفتار کر لیا گیا۔

تحریک لبیک کے رہنما نے نجی چینل سے بات کرتے ہوئے اس خبر کی تصدیق کر دی ہے۔

اطلاعات کے مطابق ناموس رسالت مارچ کے اعلان کے بعد حکومت نے تحریک لبیک کے سربراہ حافظ سعد رضوی کو گرفتار کیا۔

حافظ سعید رضوی کی گرفتاری کا دعویٰ تحریک لبیک کے کارکنان کی جانب سے سوشل میڈیا پر کیا جا رہا ہے تھا ، تحریک لبیک کے شعبہ خواتین کی جانب سے بنائی گئی ٹویٹر آئی ڈی سے ٹویٹ کی گئی جس میں کہا گیا کہ مرکزی امیر تحریک لبیک پاکستان حافظ محمد سعد حسین رضوی کو لاہور سے گرفتار کر لیا گیا۔

سوشل میڈیا پر ہونیوالے اس دعوے کی تصدیق کے لئے نجی سوشل میڈیا ٹی وی نے تحریک لبیک کے رہنما سے رابطہ کیا تو انہوں نے اس بات کی تصدیق کی کہ سعد رضوی کو گرفتار کر لیا گیا ہے، سعد رضوی رحیم سٹور کے مالک رانا اختر محمود کی نماز جنازہ پڑھانے گئے تھے جہاں سے پولیس نے انہیں حراست میں لیا۔

یاد رہے کہ تحریک لبیک کے امیر حافظ سعد رضوی نے اعلان کرتے ہوئے کہا تھا کہ اگر فرانس کے سفیر کو ملک بدر نہ کیا گیا تو 20 اپریل کی شب 12 بجے علامہ خادم رضوی کے مزار سے ناموس رسالت مارچ کا آغاز ہو گا۔